Gomal University

گومل یونیورسٹی میں”تعلیم کے ذریعے امن کے قیام ”پر سیمینار سے خطاب

ڈیرہ اسماعیل خان وائس چانسلر گومل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر شکیب اللہ کی خصوصی ہدایت پر گومل یونیورسٹی کے ڈائریکٹریٹ آف اورک ‘انسٹیٹیوٹ آف ایجوکیشن اینڈ ریسرچ (آئی ای آر)، ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی)اسلام آباد اور ہائر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ (ایچ ای ڈی)پشاور کے باہمی اشتراک سے گومل یونیورسٹی اور ملحقہ کالجوں میں ”تعلیم کے ذریعے امن کے قیام ”پر ایک روزہ سیمینار کا انعقاد کیا گیا ۔ پروگرام کے مہمان خصوصی ڈین فیکلٹی آف آرٹس پروفیسر ڈاکٹر محمد نعمت اللہ بابر تھے جبکہ ان کے ہمراہ زرعی یونیورسٹی کے ڈین پروفیسر ڈاکٹر نعمت اللہ جیلانی سمیت قائداعظم کیمپس کے تمام شعبہ جات کے سربراہان اور طلباء بھی موجود تھے۔ پروگرام کے مین آرگنائزر اور مہمان سپیکر آئی ای آرکے ڈاکٹر اللہ نور تھے ۔سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈین فیکلٹی آف آرٹس پروفیسر ڈاکٹر محمد نعمت اللہ بابر نے کہا کہ سکولوں میں د ی جانیوالی تعلیم میں قیام امن کو سلیبس میں شامل کرنا وقت کی ضرورت ہے کیونکہ اس طرح ہم اپنی آنیوالی نسلوں کو امن کا داعی بنا کر معاشرے کا بہترین اور ذمہ داری شہری بنانے میں مثبت کردار ادا کر سکتے ہیں۔ سیمینار میں ڈاکٹر اللہ نور ،سربراہ شعبہ اردو ڈاکٹر سفیر اللہ و دیگر نے بتایا کہ کیسے ہم تعلیمی نصاب میں امن کے بارے میں سلیبس کو بہترکر سکتے ہیں تاکہ بچے کلاس روم میں امن کے بارے میں سوچ سکیں ۔اس موقع پر نواب اللہ نواز لا کالج کے استاد سراج خان نے تمام تر قانونی پہلووں اور پیچیدگیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے امن کے حوالے سے تفصیلی بات کی ۔سیمینار سے ڈائریکٹر آف اورک و ڈین فیکلٹی آف فارمیسی ڈاکٹر برکت علی نے امن کے حوالے سے تفصیلی بات کرتے ہوئے بتایا کہ امن ہے کیا اور اس کو تعلیم میں کس طریقے سے لاگو کر کے ہم طلبہ کو امن کے حوالے سے بتا سکتے ہیں اور کس طرح طلبہ قیام امن کے لیے اپنا کردار ادا کر سکتے ہیں انہوں نے زور دیا کہ پرائمری سکول کے سلیبس میں طلبہ کو امن کے بارے میں بتایا جائے تاکہ معاشرے کے ساتھ ساتھ ان کے گھروں میں بھی وہ قیام امن کے داعی بنیں کیونکہ جب ایک گھر پر امن رہتا ہے تو پھر معاشرہ خود پرامن ہوتا ہے اور اس طرح طلبا ملک اور قوم کی ترقی کا باعث بنتے ہیں۔ پروگرام کے اختتام پر مہمان خصوصی نے شرکاء میں تعریفی سرٹیفیکیٹس بھی تقسیم کیں

Scroll to Top